ارشد شریف کے جنازے کے دوران ہی رانا ثناء اللہ کی پریس کانفرنس

رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ عمران خان نیازی ایک قومی ناسور بن چکا ہے۔

ڈی جی آئی ایس آئی اور ڈی جی آئی ایس پی آر کی پریس کانفرنس کے بعد عمران خان قوم کے سامنے مکمل ایکسپوز ہوچکا ہے۔
رانا ثناء اللہ نے کہا کہ عمران خان نیازی جیسے ناسور کا علاج اس ملک اور قوم کی بقا کےلیے بہت ضروری ہے۔
سوچنے کی بات ہے کہ کس طرح سے اس نے سائفر کا ڈرامہ رچایا۔
اپنی حکومت کے خلاف عدم اعتماد کو ناکام کرنے کےلیے ۔
ملک کے ڈپلومیٹک اسٹیٹس کو تباہ کرنے کے لیے ایک ایسا موقف اختیار کیا جس کی کوئی بنیاد نہیں تھی۔
ان کا کہنا تھا اگر آرمی چیف غیرمعینہ مدت تک ایکسٹینشن لے لیتے ہیں تو پھر یہ شخص آرمی چیف کی تعریفوں کے پل باندھ دیتا۔
آرمی چیف صاحب نے اس ملک کی بہت خدمت کی ہے۔ انہوں نے اس ملک کی معیشت کے لیے بہت کام کیا ہے۔
رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا عمران خان ملک کے نوجوانوں کو گمراہ کررہے ہیں۔
ان کا کہنا تھا کہ عمران خان منفی تقریریں کرکے منفی پروپیگنڈا پھیل رہے ہیں۔ عمران خان کے منفی پروپیگنڈے سے جمہوریت پروان نہیں چڑھے گی۔
اگر اس شخص کے مفادات کے لیے کوئی کام کرتا ہے تو یہ اس کی تعریفی کرتا ہے۔ اگر اس کے مفادات کے لیے کام نہیں کرتا تو اس کو میر جعفر اور میر صادق کہنا شروع کردیتا ہے۔

پنجاب حکومت عمران خان کے لانگ مارچ کا حصہ نہیں بنے گی، وزیر داخلہ پنجاب

Shakira could face 8 years in jail

پاکستان میں صحت عامہ کی صورتحال تباہی کے دہانے پر ہے، عالمی ادارہ صحت

اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.