نامور ایرانی فلم ساز کو چھ سال قید

ایران کی عدلیہ نے ملک کے اعلیٰ فلم سازوں میں سے ایک ظفر پناہی کو چھ سال کی سزا مکمل کرنے کا حکم دے دیا۔
یہ سزا تقریباً ایک دہائی قبل سنائی گئی تھی لیکن اس پر عمل درآمد نہیں ہوا۔
ایرانی عدلیہ کے ترجمان مسعود سیٹیشی نے اعلان کیا کہ حتمی فیصلے کے مطابق ایوارڈ یافتہ ڈائریکٹر پناہی کو حکومت مخالف پروپیگنڈہ پھیلانے کے الزام میں سنہ 2011 میں سنائی گئی چھ سال قید کی سزا کا سامنا کرنا پڑے گا، جس پر اسی وقت عملدرآمد ہونا چاہیے تھا۔
تاہم پناہی کے سفر پر گزشتہ کئی سالوں سے پابندی عائد ہے۔ اس لیے اس کو دی گئی سزا پر کبھی عمل نہیں ہوا۔ وہ زیر زمین فلمیں بناتا رہتا ہے، جنہیں بیرون ملک نمائش کے لیے بہت پذیرائی ملتی ہے۔
انہیں کئی بین الاقوامی فلمی میلوں میں اعزاز سے نوازا گیا ہے۔ ان میں سال 2015 میں فلم “ٹیکسی” کے لیے برلن گولڈن بیئر ایوارڈ بھی شامل ہے۔
انہوں نے اسلامی جمہوریہ میں غربت، صنفی تفریق، تشدد اور سنسر شپ کے خلاف فلمیں بنائی ہیں، جس سے حکومت ناراض ہے۔
حکام نے پناہی کو گزشتہ ہفتے اس وقت گرفتار کیا جب وہ تہران کے پراسیکیوٹر کے دفتر میں اپنے ساتھیوں اور باغی فلم سازوں محمد رسولوف اور مصطفیٰ الاحمد کی حراست کے بارے میں پوچھ گچھ کے لیے آئے تھے۔

ایڈیشنل چیف کا چولستان کی پانی عدم دستیابی بارے نوٹس
شہری کورونا کیساتھ ڈینگی سے بچاؤ کی احتیاطی تدابیر اپنائیں‘عمران سکندر بلوچ
چولستان خشک سالی کے پیش نظر ریلیف پیکج جاری
پانی کی قلت بھوک، پیاس اور قحط کا دور شروع ہونے کا خطرہ
نرسنگ ڈے کے موقع پر ڈی ایچ کیو ہسپتال میں تقریب کا انعقاد
سبی ملک کا گرم ترین شہر رہا، درجہ حرارت 47 ریکارڈ
صحت کے شعبہ پر خصوصی توجہ ، ڈپٹی کمشنر
سعودی بادشاہ ہسپتال منتقل
اومیکرون کی نئی ساخت ،وزیراعظم کا این سی اوسی کو بحال کرنیکا حکم
پاکستان نے افغانستان کے سیلاب متاثرین کیلئے ریلیف سامان روانہ کر دیا
سیکرٹری محکمہ ہیلتھ کیئر جنوبی پنجاب کا اہم دورہ
ذہنی امراض کی تشخیص اور علاج،دماغی صحت بھی ہیلتھ سروسز کا حصہ
سیکرٹری ہیلتھ نےعید کی چھٹیوں میں ایمرجنسی سے نمٹنے کیلےپلان طلب کر لیا
ناگہانی حالات سے نمٹنے کیلےریسکیو1122کا ڈیوٹی پلان جاری
محکمہ موسمیات کی ملک بھر میں شدید گرمی کی پیشگوئی

اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.