چور میوزیم سے صرف 9 منٹ میں 16 لاکھ یورو کے سونے کے سکے لے اڑے

چوروں نے جرمنی کے ایک میوزیم سے 16 لاکھ یورو مالیت کے تاریخی سونے کے سکے چرا لیے ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ریاست بویریا کے شہر مینچنگ میں واقع اس میوزیم سے سینکڑوں سکے رات گئے صرف نو منٹ کے اندر چرا لیے گئے۔
ممکنہ طور پر چوروں نے پہلے میوزیم کے الارم سسٹم کو سبوتاژ کیا اور پھر اندر داخل ہوئے۔ اندر جانے سے قبل آس پاس کی انٹرنیٹ کی تاریں بھی کاٹ دی گئی تھیں جس کے باعث علاقے میں انٹرنیٹ معطل ہو گیا۔
پولیس تفتیش کر رہی ہے کہ آیا یہ چوری کسی گذشتہ واردات سے منسلک تو نہیں۔ چوروں کی جانب سے سسٹم ناکام بنائے جانے کے باعث دروازہ توڑنے کے باوجود الارم نہیں بجا تاہم اس نے چوری کی یہ واردات ریکارڈ ضرور کی ہے۔
اگلی صبح ملازمین کو میوزیم کے فرش پر شیشے کی کرچیاں ملیں جبکہ شو کیس میں نمائش کے لیے رکھے گئے سکے غائب تھے۔
سٹیٹ آرکیالوجیکل کلیکشن میں ہیڈ آف کلیکشنز روپرٹ گیبہارڈ نے اس نقصان پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا: ’یہ کسی پرانے دوست کو کھونے جیسا ہے۔‘
ایک اور ڈسپلے کیس میں سے تین بڑے سکے چرائے گئے ہیں۔
حکام کو شک ہے کہ اس چوری کے پیچھے ایک منظم گروہ موجود ہے اور پولیس گذشتہ وارداتوں سے کسی ممکنہ تعلق کا پتا لگا رہی ہے۔
سنہ 2017 میں برلن کے ایک میوزیم سے 100 کلو وزنی ایک سونے کا سکہ چھین لیا گیا تھا۔ دو سال بعد چور ڈریسڈن کے گرین والٹ میوزیم سے 21 زیورات اور دیگر قیمتی اشیا لے اڑے۔ یہ پوری واردات بھی سی سی ٹی وی پر ریکارڈ ہوئی تھی۔
پنجاب حکومت عمران خان کے لانگ مارچ کا حصہ نہیں بنے گی، وزیر داخلہ پنجاب

Shakira could face 8 years in jail

پاکستان میں صحت عامہ کی صورتحال تباہی کے دہانے پر ہے، عالمی ادارہ صحت

اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.